19

مریم نواز نے بلدیاتی انتخابات میں غیر متوقع نتائج کے بعد پی ٹی آئی پر تنقید کی۔

'تبدیلی جا رہا ہے': مریم نے بلدیاتی انتخابات میں غیر متوقع نتائج کے بعد پی ٹی آئی پر تنقید کی

اسلام آباد: خیبرپختونخوا میں جاری بلدیاتی انتخابات کے دوران پی ایم ایل این کی نائب صدر مریم نواز نے پیر کو پی ٹی آئی کو اس کے نقصانات پر طنز کرتے ہوئے کہا کہ پارٹی نے جس تبدیلی کا وعدہ کیا تھا وہ اپنے انجام کو پہنچ رہی ہے، وہ بھی ذلت آمیز انداز میں۔

“تبدیلی آ نہیں رہی – یہ جا رہی ہے،” انہوں نے ٹویٹر پر لکھا، پی ٹی آئی کے مشہور نعرے “تبدیلی آ نہیں رہی، تبدیلی آ گئی ہے” (تبدیلی آ نہیں رہی، یہ پہلے ہی آ چکی ہے)۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ وعدہ بند تبلیغی اپنے انجام کو پہنچ رہی ہے، وہ بھی ذلت آمیز اور ذلت آمیز انداز میں۔ انہوں نے کہا کہ حکومت نے ملک کے 220 ملین لوگوں کو “مہنگائی، لاقانونیت، اور نااہلی” جیسے مسائل میں دھکیل دیا ہے، جس کے نتیجے میں عوام حکومت کو کوس رہے ہیں۔

خیبرپختونخوا میں جاری بلدیاتی انتخابات میں اپوزیشن جماعتوں نے میئر کی چار میں سے دو نشستیں جیت لی ہیں، جب کہ غیر سرکاری نتائج کے مطابق حکمران جماعت پی ٹی آئی کو تیسری نشست بھی ہارنے کا خطرہ ہے۔

مردان میں عوامی نیشنل پارٹی (اے این پی) کے حمایت اللہ میئر منتخب ہوگئے، جے یو آئی (ف) کے شیر زمان کوہاٹ سے منتخب ہوئے جب کہ پشاور اور بنوں سے نتائج کا ابھی انتظار ہے۔

تاہم، JUI-F کے امیدوار زبیر علی پشاور کے میئر کے انتخاب میں برتری پر ہیں، کیونکہ انہوں نے 521 پولنگ اسٹیشنوں میں سے 515 کے غیر سرکاری نتائج کے مطابق، 62,388 ووٹ حاصل کیے ہیں۔ غیر سرکاری غیر حتمی نتائج کے مطابق پی ٹی آئی کے محمد رضوان 50 ہزار 659 اور اے این پی کے شیر زمان 49 ہزار 596 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔

صوبے میں پانچ سٹی کونسلز ہیں تاہم انتخابات صرف چار پر ہو رہے ہیں کیونکہ ڈیرہ اسماعیل خان میں اے این پی کے میئر کے امیدوار عمر خطاب شیرانی کو گولی مار کر ہلاک کر دیا گیا تھا جس کے بعد پولنگ ملتوی کر دی گئی تھی۔

اب تک موصول ہونے والے 64 تحصیل کونسلوں کے غیر سرکاری نتائج میں جے یو آئی (ف) نے 14 تحصیل کونسلوں کی نشستوں پر کامیابی حاصل کی ہے جبکہ پی ٹی آئی نے 10 نشستوں پر کامیابی حاصل کی ہے۔تحصیل کونسلوں سے اے این پی اور آزاد امیدواروں نے پانچ پانچ نشستوں پر کامیابی حاصل کی ہے جبکہ مسلم لیگ ن اب تک صرف ایک تحصیل کونسل کی نشست پر کامیابی حاصل کی ہے۔ غیر سرکاری نتائج نے مزید تصدیق کی ہے کہ جماعت اسلامی نے تحصیل کونسل کے انتخابات میں بھی ایک نشست جیتی ہے۔

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں