7

NW انسداد دہشت گردی آپریشن میں چار فوجیوں نے جام شہادت نوش کیا۔

NW انسداد دہشت گردی آپریشن میں چار فوجیوں نے جام شہادت نوش کیا۔

اسلام آباد: آئی ایس پی آر کے مطابق شمالی وزیرستان میں دہشت گردوں کے ساتھ فائرنگ کے تبادلے میں پاک فوج کے 4 جوان شہید ہوگئے۔

سیکیورٹی فورسز نے دہشت گردوں کی موجودگی کی اطلاع پر شمالی وزیرستان کے علاقے میر علی میں انٹیلی جنس بیسڈ آپریشن (IBO) کیا۔ ایک دہشت گرد کو اسلحہ اور گولہ بارود سمیت گرفتار کر لیا گیا۔ فائرنگ کے شدید تبادلے کے دوران چار فوجیوں نے شہادت کو گلے لگا لیا۔ شہید ہونے والوں میں حوالدار منور عمر 40 سال، بہاولنگر کا رہائشی، سپاہی ذکاء اللہ عمر 31 سال، لکی مروت، سپاہی فرحان عمر 34 سال، کوہاٹ، سپاہی شیراز عمر 30 سال، ایبٹ آباد کا رہائشی۔

دریں اثناء سیکورٹی فورسز نے دہشت گردوں کی موجودگی کی اطلاع پر ٹانک میں آئی بی او بھی کیا۔ دو دہشت گردوں کی شناخت شاہ زیب عرف ذاکر اور دانیال کے نام سے ہوئی ہے۔

2021 کے دوران دہشت گردانہ حملوں میں پاک افغان اور پاک ایران سرحدوں کے قریب کم از کم 90 نوجوان افسران (چھ کیپٹن)، جونیئر کمیشنڈ آفیسرز (JCOs) اور سپاہی شہید ہو چکے ہیں۔ سیکیورٹی فورسز نے دہشت گردی کی کارروائیوں میں ملوث بہت سے دہشت گردوں کو بھی ہلاک کیا۔

اے پی پی نے مزید کہا: دریں اثنا، وزیراعظم عمران خان نے میر علی میں پاک فوج کے 4 اہلکاروں کی شہادت پر اظہار تعزیت کیا۔ وزیراعظم نے دہشت گردی کے خاتمے کے لیے پاکستان کی مسلح افواج کی خدمات کو سراہا۔ انہوں نے کہا کہ اس جنگ میں پوری قوم متحد تھی اور دشمن کا مقابلہ بہادر قوم سے ہوا جو ہر مشکل وقت میں ثابت قدم رہی۔

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں