9

لاہور ہائیکورٹ نے میمن کی درخواست پر ایف آئی اے کو نوٹس جاری کر دیا۔

لاہور ہائیکورٹ نے میمن کی درخواست پر ایف آئی اے کو نوٹس جاری کر دیا۔

لاہور (وقائع نگار خصوصی) لاہور ہائیکورٹ نے ایف آئی اے کے سابق ڈائریکٹر جنرل بشیر میمن کے خلاف انکوائری کا ریکارڈ طلب کرنے کی درخواست پر وفاقی تحقیقاتی ادارے (ایف آئی اے) کو 3 فروری کے لیے نوٹس جاری کر دیا۔

عدالت نے ایجنسی کو میمن کے خلاف زبردستی اقدامات کرنے سے روک دیا۔ جسٹس امجد رفیق پر مشتمل سنگل بنچ نے سابق ڈی جی ایف آئی اے کی درخواست پر سماعت کی۔ درخواست گزار کے وکیل نے عدالت کے روبرو دلائل دیتے ہوئے کہا کہ ایجنسی نے ماڈل صوفیہ مرزا کے سابق شوہر عمر فاروق ظہور کے خلاف کارروائی نہ کرنے کے الزام میں ان کے موکل کے خلاف تین انکوائریاں شروع کی ہیں۔

انہوں نے موقف اختیار کیا کہ درخواست گزار نے مذکورہ انکوائری میں سیشن عدالت سے عبوری ضمانت حاصل کی تھی جبکہ اس نے کیسز میں تفتیشی ٹیم کو ویڈیو لنک کے ذریعے اپنا بیان ریکارڈ کرایا تھا۔

انہوں نے کہا کہ انکوائریوں کا ریکارڈ ان کے موکل کو فراہم نہیں کیا جا رہا۔ عدالت نے ابتدائی دلائل سننے کے بعد مدعا علیہ کو نوٹس جاری کرتے ہوئے ایجنسی کو سابق ڈی جی کے خلاف کوئی بھی زبردستی اقدام اٹھانے سے روک دیا۔

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں