16

‘آج شاہ زیب خانزادہ کے ساتھ’: وزیر اعظم سیاست میں مذہب کا استعمال کرتے ہیں: پی ٹی آئی کے منحرف ایم این اے

کراچی: پی ٹی آئی کے منحرف رکن قومی اسمبلی باسط بخاری نے پیر کو کہا کہ وزیر اعظم عمران خان نے کھیل ہارنے کے بعد سیاست میں مذہب کو استعمال کرنے کا سہارا لیا۔

جیو نیوز کے پروگرام آج شاہ زیب خانزادہ کے ساتھ میں گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ یورپی یونین کا خط ایک معمول کا معاملہ تھا لیکن وزیراعظم نے اسے بڑھا چڑھا کر پیش کیا۔ یہ پیش گوئی کرتے ہوئے کہ وزیر اعظم پیر کو بنی گالا واپس آئیں گے، بخاری نے عدم اعتماد کے ووٹ کو کامیاب بنانے کا عزم کیا۔

ایک اور منحرف ایم این اے رمیش کمار نے کہا کہ پرویز الٰہی کو بلند و بانگ دعوے نہیں کرنے چاہیے تھے اگر انہیں بالآخر عمران خان کا ساتھ دینا پڑا۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان کا پرویز الٰہی کو گلے لگانا ان کی سمجھ سے بالاتر ہے۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان کہتے تھے کہ عثمان بزدار کو کبھی نہیں ہٹائیں گے لیکن اب انہیں ہٹا دیا ہے۔ رمیش نے عمران خان کو احسن طریقے سے مستعفی ہونے کا مشورہ دیا۔ انہیں یقین تھا کہ اختلاف کرنے والے اپنے عزم پر قائم رہیں گے اور اس سے دستبردار ہونے والا کسی کی سیاست کو خراب کر دے گا۔

انہوں نے حیرت کا اظہار کیا کہ ریاستی ادارے اس سازش کو کیوں نہیں کھود سکتے جس کی وزیر اعظم نے بات کی، لیکن وزارت خارجہ نے کیا! پروگرام کے میزبان سے بات کرتے ہوئے وزیر داخلہ شیخ رشید نے دعویٰ کیا کہ عمران خان آخری گیند تک کھیلیں گے، اور پیشن گوئی کی کہ مخالفین بالآخر وزیر اعظم کی طرف واپس آئیں گے۔ انہوں نے کہا کہ طارق بشیر چیمہ کو اپنے حلقے سے متعلق مسائل ہیں۔ وہ ضدی ہے لیکن چوہدری برادران اس سے نمٹ لیں گے۔

وزیر نے کہا کہ انہوں نے وزیراعظم کو پنجاب اسمبلی تحلیل کرنے کا مشورہ دیا ہے۔ انہوں نے قبل از وقت انتخابات کا مشورہ دیا کیونکہ ان کا خیال تھا کہ وزیراعظم کی مقبولیت زیادہ ہے۔ اس کے بعد وزیر نے چوہدری برادران کے لیے اپنی خدمات کا ذکر کیا۔ انہوں نے کہا، ’’ہم نے قتل کے مقدمات کا سامنا کیا اور کئی سال گندے تھانوں میں گزارے، لیکن کبھی شکایت نہیں کی کیونکہ یہ کارکن ہے جو (لیڈر کے لیے) قربانیاں دیتا ہے۔‘‘

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں