20

وزیراعظم نے ہنگامی طور پر پولیو ویکسینیشن مہم کا حکم دے دیا۔

اسلام آباد: وزیر اعظم شہباز شریف نے پیر کو حکام کو ہدایت کی ہے کہ ملک سے پولیو کے خاتمے کے لیے تمام ممکنہ ذرائع بروئے کار لاتے ہوئے ہنگامی بنیادوں پر پولیو کے خاتمے کی مہم چلائی جائے۔

وہ یہاں ملک کے حساس اضلاع میں پولیو کے خاتمے کے حوالے سے منعقدہ اجلاس کی صدارت کر رہے تھے۔ اجلاس میں وزیر صحت عبدالقادر پٹیل، وزیر اطلاعات و نشریات مریم اورنگزیب، صوبائی چیف سیکرٹریز، متاثرہ اضلاع کے ڈپٹی کمشنرز اور دیگر حکام نے شرکت کی۔

وزیراعظم نے شمالی وزیرستان، جنوبی وزیرستان اور بنوں سمیت خیبرپختونخوا کے جنوبی اضلاع پر خصوصی توجہ دینے کا حکم دیا۔ انہوں نے ایسے بچوں کو پولیو سے بچاؤ کے قطرے پلانے کا بھی حکم دیا جنہیں پہلے کسی وجہ سے ویکسین نہیں لگائی جا سکی۔ وزیراعظم نے لوگوں کو بہترین طبی سہولیات فراہم کرنے کا مشورہ دیا تاکہ پولیو کے پھیلاؤ کو سختی سے روکا جا سکے۔

دریں اثنا، وزیر اعظم شہباز شریف نے بھارت کے غیر قانونی طور پر مقبوضہ جموں و کشمیر (IIOJ&K) کے لوگوں کے ساتھ یکجہتی کا اظہار کیا، جنہوں نے بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کے مقبوضہ علاقے کے دورے کو مسترد کر دیا۔ وزیر اعظم نے اپنے ٹویٹر پر کہا ، “ہم ہندوستان کے غیر قانونی طور پر مقبوضہ جموں و کشمیر کے لوگوں کے ساتھ کھڑے ہیں کیونکہ انہوں نے دورے کو مسترد کر دیا اور یوم سیاہ منایا۔”

شہباز شریف نے کہا کہ بھارتی وزیراعظم نے مقبوضہ کشمیر کا دورہ کیا اور سندھ طاس معاہدے کی خلاف ورزی کرتے ہوئے ہائیڈرو الیکٹرک منصوبوں کا سنگ بنیاد رکھا، جو کہ مقبوضہ علاقے میں غلط معمول کو پیش کرنے کی ایک اور مایوس کن کوشش تھی۔

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں