14

امریکہ نے موسم خزاں کے لیے فائزر ویکسین کی 105 ملین خوراکیں حاصل کیں۔

وائٹ ہاؤس کے حکام پہلے کہہ چکے ہیں کہ امریکی کانگریس کی جانب سے نئی فنڈنگ ​​کے بغیر، مستقبل میں کووِڈ کی ویکسین صرف ان لوگوں کو مفت میں دی جا سکتی ہیں جنہیں سب سے زیادہ خطرہ ہے۔  تصویر: اے ایف پی/فائل
وائٹ ہاؤس کے حکام پہلے کہہ چکے ہیں کہ امریکی کانگریس کی جانب سے نئی فنڈنگ ​​کے بغیر، مستقبل میں کووِڈ کی ویکسین صرف ان لوگوں کو مفت میں دی جا سکتی ہیں جنہیں سب سے زیادہ خطرہ ہے۔ تصویر: اے ایف پی/فائل

واشنگٹن: ریاستہائے متحدہ نے بدھ کے روز اس موسم خزاں میں امریکیوں کے لیے کووِڈ ویکسین کی 105 ملین خوراکوں کے لیے فائزر اور بائیو ٹیک کے ساتھ ایک معاہدے کا اعلان کیا۔

کمپنیوں اور امریکی محکمہ صحت اور دفاع کے درمیان $3.2 بلین کے معاہدے پر دستخط کیے گئے، اس میں بچوں، چھوٹے بچوں، نوعمروں اور بڑوں کے لیے ویکسین شامل ہیں، اور اس میں Omicron سے متعلق مخصوص ویکسین بھی شامل ہو سکتی ہے، جس کی حکومتی ماہرین کے ایک پینل نے منگل کو سفارش کی تھی۔

کمپنیوں نے کہا کہ ترسیل موسم گرما کے آخر میں شروع ہوگی اور چوتھی سہ ماہی تک جاری رہے گی۔ یہ معاہدہ امریکہ کو 300 ملین تک خوراک حاصل کرنے کا اختیار دیتا ہے۔

صحت اور انسانی خدمات کے سکریٹری زیویر بیکرا نے ایک بیان میں کہا ، “بائیڈن ہیرس انتظامیہ امریکیوں کو ویکسین مفت اور وسیع پیمانے پر دستیاب کرنے کے لئے ہر ممکن کوشش کرنے کے لئے پرعزم ہے – اور یہ ہمیں زوال کے لئے تیار کرنے کے لئے ایک اہم پہلا قدم ہے۔” بیان

صدر جو بائیڈن کی انتظامیہ نے کانگریس سے 23.5 بلین ڈالر کی اضافی کوویڈ فنڈنگ ​​کی درخواست کی ہے، لیکن ابھی تک کوئی بل منظور نہیں ہو سکا ہے۔

اس کے نتیجے میں، وفاقی حکومت کو “کوویڈ 19 کے ردعمل کی کوششوں سے اربوں ڈالر نکالتے ہوئے، موجودہ فنڈز میں 10 بلین ڈالر دوبارہ مختص کرنے پر مجبور کیا گیا” بیان میں کہا گیا ہے، اس دوبارہ جگہ کے ذریعے خریدی گئی نئی ویکسین کے ساتھ۔

وائٹ ہاؤس کے حکام نے پہلے کہا ہے کہ نئی فنڈنگ ​​کے بغیر، مستقبل کی ویکسین صرف ان لوگوں کو مفت میں دی جا سکتی ہے جو سب سے زیادہ خطرے میں ہیں۔

Source link

کیٹاگری میں : صحت

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں