11

ٹرانسپورٹرز نے ملک گیر ہڑتال ختم کر دی۔

اسلام آباد: مقامی میڈیا کی خبر کے مطابق، پبلک ٹرانسپورٹرز نے جمعرات کو پاکستان بھر میں ہڑتال ختم کرنے کا اعلان کیا۔

ٹرانسپورٹرز نے ٹیکسوں میں اضافے کے خلاف ملک گیر ہڑتال کر رکھی تھی جس سے ملک بھر میں ہزاروں مسافر پھنسے ہوئے تھے۔ انٹر سٹی ٹرانسپورٹرز نے بدھ کو اعلان کیا تھا کہ وہ غیر معینہ مدت کے لیے پہیہ جام ہڑتال پر جانے کے لیے تیار ہیں، کیونکہ ان کا احتجاج دوسرے دن میں داخل ہو گیا، جب تک کہ حکومت حالیہ بجٹ میں عائد کیے گئے اضافی ٹیکسوں کو واپس نہیں لے لیتی۔

پبلک ٹرانسپورٹ ایکشن کمیٹی نے سیلاب اور محرم الحرام کے مقدس مہینے کے باعث تین روزہ ہڑتال ختم کردی۔ حکومت کی جانب سے ٹیکس 300 روپے سے بڑھا کر 4000 اور 8000 روپے کرنے کے بعد ٹرانسپورٹ مالکان اپنے تحفظات کا اظہار کر رہے تھے۔ مالکان نے مزید کہا کہ بھاری ٹیکس کے بعد پبلک ٹرانسپورٹ چلانا ممکن نہیں ہو گا۔ ٹرانسپورٹ مالکان نے حکومت سے پبلک ٹرانسپورٹ کو انڈسٹری کا درجہ دینے کا بھی مطالبہ کیا۔ ٹرانسپورٹرز نے حکومت سے ڈیزل کی قیمتوں میں کمی کا مطالبہ بھی کیا۔

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں