27

مہر بانو موسیٰ گیلانی کے مقابلے میں موزوں ترین امیدوار ہیں: قریشی

پی ٹی آئی کے وائس چیئرمین شاہ محمود قریشی جلسے سے خطاب کر رہے ہیں۔  - پی ٹی آئی فیس بک
پی ٹی آئی کے وائس چیئرمین شاہ محمود قریشی جلسے سے خطاب کر رہے ہیں۔ – پی ٹی آئی فیس بک

ملتان: پی ٹی آئی کے وائس چیئرمین اور سابق وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے پیر کو کہا کہ ان کی بیٹی کو پارٹی کے وسیع تر مفاد میں ٹکٹ دیا گیا ہے، کیونکہ ملتان کے حلقے میں موسیٰ گیلانی کے مقابلے کے لیے کوئی اور موزوں امیدوار نہیں تھا۔

ممتاز آباد میں نویں محرم کے جلوس کے دوران صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے شاہ محمود قریشی نے سابق وزیراعظم اور پیپلز پارٹی کے رہنما سید یوسف رضا گیلانی کو خبردار کیا کہ وہ حدود میں رہیں اور اپنی حیثیت کے مطابق بات کریں۔

انہوں نے کہا کہ محترمہ بے نظیر بھٹو نے انہیں احترام کے ساتھ پیپلز پارٹی میں شمولیت کی دعوت دی تھی اور انہیں وزیر خارجہ کا عہدہ دینے کی پیشکش کی تھی۔ مہر بانو عمران خان کے بیانیے کی تشہیر کے لیے الیکشن لڑ رہی ہیں۔ جب مشکل وقت آتا ہے تو قوم کی بچیوں کو بھی اپنا کردار ادا کرنا ہوتا ہے۔ وہ اپنی مشرقی روایات کو مدنظر رکھتے ہوئے انتخابی مہم چلائیں گے۔ جہاں تک خواتین کا تعلق ہے مہر بانو بھی مہم چلائیں گی۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ وہ حیران ہیں کہ غزہ پر اسرائیلی حملے پر اب تک بلاول بھٹو کی جانب سے کوئی بیان سامنے نہیں آیا۔ انہوں نے کہا کہ مفتاح اسماعیل ایک قدم آگے اور دو قدم پیچھے۔ انہوں نے مزید کہا کہ تاجروں پر فکسڈ ٹیکس غیر ضروری طور پر لگایا گیا۔

انہوں نے ارشد ندیم، ملتان کو گولڈ میڈل جیتنے پر مبارکباد دی۔ انہوں نے کہا کہ جنرل سرفراز عمران خان کو خاندانی طور پر جانتے تھے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ملتان، زلزلے اور سیلاب میں فوج نے بہترین کردار ادا کیا۔

انہوں نے بھارت کی جانب سے غیر قانونی طور پر مقبوضہ جموں و کشمیر میں سوگ پر پابندی کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ کشمیر کے علاوہ پوری دنیا میں سوگ منایا گیا اور حکومت کو سفارتی طور پر احتجاج ریکارڈ کرانا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ IIOJ&K کے علاوہ پوری دنیا میں سوگ منایا جا رہا ہے۔

شاہ محمود قریشی نے حکومت پاکستان اور دفتر خارجہ سے بھارتی سفیر کو طلب کرکے احتجاج ریکارڈ کرانے کی درخواست کی۔ سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ استعفوں کے حوالے سے اسلام آباد ہائی کورٹ میں رٹ پٹیشن دائر کی گئی ہے جس کی سماعت بدھ کو ہوگی۔ انہوں نے مزید کہا کہ پی ٹی آئی نے تمام حلقوں سے مستعفی ہونے کا فیصلہ کیا ہے۔

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں