22

لاہور ہائیکورٹ نے سوشل میڈیا ریگولیشن سے متعلق رپورٹ طلب کر لی

لاہور ہائی کورٹ راولپنڈی بنچ نے…  ایل ایچ سی کی ویب سائٹ
لاہور ہائی کورٹ راولپنڈی بنچ نے… ایل ایچ سی کی ویب سائٹ

راولپنڈی: لاہور ہائی کورٹ راولپنڈی بینچ نے بدھ کے روز گستاخانہ مواد کی اشاعت کے حوالے سے عوام میں شعور اجاگر کرنے کے لیے پرنٹ اور الیکٹرانک میڈیا میں مہم شروع کرنے کی ہدایت کی۔

درخواست پر سماعت کرتے ہوئے جسٹس چوہدری عبدالعزیز نے ڈائریکٹر پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی (پی ٹی اے) محمد فاروق کو 8 دن میں رپورٹ پیش کرنے کا حکم دیا۔

عدالت نے سوشل میڈیا کے ریگولیشن اور گستاخانہ مواد ہٹانے سے متعلق رپورٹ بھی طلب کر لی۔ عدالت نے 10 فروری کو گستاخانہ مواد کی اشاعت کے خلاف درخواست موصول ہونے کے بعد کارروائی شروع نہ کرنے اور سائبر کرائمز ونگ کے ریکارڈ سے درخواست کی عدم موجودگی پر اسسٹنٹ ڈائریکٹر عمران حیدر کو بھی ذاتی حیثیت میں طلب کیا۔

فاضل جج نے تفتیشی افسر اسسٹنٹ ڈائریکٹر عمر کلیم کی ناقص تفتیش پر سرزنش کی اور کہا کہ انہوں نے معاملے کی حساسیت کے باوجود عدالتی حکم پر ٹھوس اقدامات نہیں کیے ۔

ایف آئی اے حکام نے عدالت کو بتایا کہ سوشل میڈیا پر گستاخانہ مواد کی اشاعت کے بعد انہوں نے کارروائی کرتے ہوئے تین افراد کو گرفتار کیا تھا، جبکہ باقی ملزمان کی گرفتاری کے لیے چھاپے جاری ہیں۔ عدالت کو مزید بتایا گیا کہ ایک کیس میں نامزد چار افراد بیرون ملک فرار ہوچکے ہیں۔

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں