23

سوات میں امن تنظیم کے سابق رکن کو شہید کر دیا گیا۔

مینگورہ: مقامی ذرائع نے جمعرات کو بتایا کہ ضلع سوات کی چارباغ تحصیل کے علاقے دکورک میں عسکریت پسندوں نے امن کمیٹی کے ایک سابق رکن کو گولی مار کر ہلاک کر دیا۔

ذرائع نے بتایا کہ عسکریت پسندوں نے بدھ کی شب امن کمیٹی کے سابق رکن محمد شیرین پر ان کے گھر کے قریب فائرنگ کی۔ اسے کئی گولیاں لگیں اور وہ موقع پر ہی دم توڑ گیا۔

پولیس نے نامعلوم ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کر کے تفتیش شروع کر دی ہے۔ دریں اثناء تحریک طالبان پاکستان (ٹی ٹی پی) نے امن باڈی کے رکن کے قتل کی ذمہ داری قبول کر لی ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ منگل کو ضلع سوات کی تحصیل کبل کے علاقے بارہ بانڈئی کوٹکے میں ریموٹ کنٹرول بم دھماکے میں ویلج ڈیفنس کمیٹی کے سابق رکن اور دو پولیس اہلکاروں سمیت 8 افراد شہید ہوگئے تھے۔ امن کمیٹی کے سابق چیئرمین ادریس خان جا رہے تھے کہ ان کی گاڑی کو ریموٹ کنٹرول ڈیوائس سے نشانہ بنایا گیا۔

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں