15

سپریم کورٹ نے حمزہ شہباز کو گرفتاری سے قبل آگاہ کرنے کا لاہور ہائیکورٹ کا حکم کالعدم قرار دے دیا۔

سابق وزیراعلیٰ پنجاب حمزہ شہباز۔  دی نیوز/فائل
سابق وزیراعلیٰ پنجاب حمزہ شہباز۔ دی نیوز/فائل

اسلام آباد: سپریم کورٹ نے جمعرات کو سابق وزیراعلیٰ پنجاب حمزہ شہباز کو صاف پانی، رمضان شوگر ملز اور آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس میں گرفتاری سے 10 روز قبل آگاہ کرنے کے لاہور ہائی کورٹ کے حکم کو کالعدم قرار دے دیا۔

عدالت نے کہا کہ کسی ملزم کی گرفتاری سے قبل اطلاع دینے کے لیے قانون میں کوئی شرط یا شرط موجود نہیں ہے۔

جسٹس اعجاز الاحسن کی سربراہی میں جسٹس منیب اختر اور جسٹس مظاہر علی اکبر نقوی پر مشتمل سپریم کورٹ کے تین رکنی بینچ نے لاہور ہائی کورٹ کے حکم نامے کو چیلنج کرنے والی قومی احتساب بیورو (نیب) کی اپیل کی سماعت کی۔

عدالت نے لاہور ہائیکورٹ کے حکم کو غیر موثر قرار دیتے ہوئے نیب کی درخواست نمٹا دی۔

واضح رہے کہ لاہور ہائی کورٹ نے قومی احتساب بیورو (نیب) کو پینے کے صاف پانی، آمدن سے زائد اثاثوں اور ان کے خلاف دائر ریفرنسز میں سابق وزیراعلیٰ پنجاب حمزہ شہباز کو گرفتاری سے 10 روز قبل آگاہ کرنے کا حکم دیا تھا۔ رمضان شوگر ملز کیسز

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں