25

وقار مہدی بلامقابلہ سینیٹر منتخب ہوگئے۔

کراچی: سندھ سے سینیٹ کی خالی جنرل نشست پر پاکستان پیپلز پارٹی کے امیدوار وقار مہدی ہفتے کو بلامقابلہ سینیٹ کے رکن منتخب ہوگئے۔

الیکشن کمیشن آف پاکستان نے صوبے سے خالی ہونے والی سینیٹ کے ضمنی انتخاب میں وقار مہدی کو کامیاب امیدوار قرار دیتے ہوئے نوٹیفکیشن بھی جاری کردیا۔

مہدی کی بلامقابلہ انتخابی کامیابی متحدہ قومی موومنٹ پاکستان کی جانب سے اپنے تین امیدواروں کے دستبردار ہونے کے بعد ممکن ہوئی۔

سندھ سے نومنتخب سینیٹر وقار مہدی نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ایم کیو ایم کے امیدواروں نے پیپلز پارٹی کی مفاہمت کی سیاست کے مطابق اپنے کاغذات نامزدگی واپس لے لیے ہیں۔

سندھ کے وزیر بلدیات سید ناصر حسین شاہ نے ایک بار پھر اپنے موقف کا اعادہ کیا کہ کراچی کا اگلا ایڈمنسٹریٹر ایم کیو ایم کی خواہش کے مطابق کیا جائے گا اور اعلان کیا کہ ایم کیو ایم پی سے عبدالوسیم کا نام زیر غور ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایم کیو ایم کو پی پی پی کی سندھ حکومت میں اتحادی کے طور پر شامل کرنے کے لیے بھی بات چیت جاری ہے۔

اپنے بیان میں سندھ کے وزیر اطلاعات شرجیل انعام میمن نے وقار مہدی کو بلامقابلہ سینیٹ کا رکن منتخب ہونے پر مبارکباد دی۔

انہوں نے سینیٹ کے ضمنی انتخاب میں اپنے امیدواروں کو دستبردار کرانے پر ایم کیو ایم کا بھی شکریہ ادا کیا۔ انہوں نے کہا کہ پیپلز پارٹی گورننس کے معاملات میں ہر اسٹیک ہولڈر کو ساتھ لے کر چلنا چاہتی ہے۔

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں