20

معاہدہ 132KV داسو ٹرانسمیشن لائن کی راہ ہموار کرتا ہے۔

لاہور: واپڈا، ہزارہ ڈویژن کی سول انتظامیہ اور متحدہ کوہستان جرگہ، جس میں تین اضلاع اپر کوہستان، لوئر کوہستان اور کولائی پالاس کوہستان کے معززین شامل ہیں، نے متعدد ترقیاتی سکیموں پر عملدرآمد کے لیے ایک معاہدہ کیا۔

سب سے اہم بات یہ ہے کہ یہ معاہدہ دبیر ہائیڈل پاور سٹیشن سے داسو تک طویل عرصے سے تاخیر کا شکار 132 KV ٹرانسمیشن لائن کو ہموار کرنے اور مکمل کرنے کی راہ ہموار کرے گا، جس کی داسو ہائیڈرو پاور پراجیکٹ کی تعمیراتی مدت کے دوران بجلی کی مستحکم فراہمی کے لیے اشد ضرورت ہے۔ . واپڈا کی طرف سے ترقیاتی سکیموں کے بدلے تینوں اضلاع کے مقامی لوگ ٹرانسمیشن لائن کی تعمیر میں رکاوٹیں پیدا نہیں کریں گے اور اس پر عمل درآمد کو یقینی بنائیں گے۔ معاہدے پر دستخط ایک تقریب میں وزیراعظم کے مشیر انجینئر امیر مقام، واپڈا کے چیئرمین لیفٹیننٹ جنرل سجاد غنی (ریٹائرڈ)، کمشنر ہزارہ ڈویژن مطہر زیب، کوہستان ریجن سے تعلق رکھنے والے معززین اور واپڈا کے سینئر افسران نے ایک تقریب میں کئے۔

معاہدے کے مطابق واپڈا اپنی کارپوریٹ سماجی ذمہ داری (CSR) کے تحت سول انتظامیہ اور مقامی لوگوں کی مشاورت سے اعتماد سازی کے اقدامات کے طور پر متعدد اسکیموں پر عمل درآمد کرے گا۔ یہ کوہستان کے تین اضلاع میں ٹرانسمیشن، ڈسٹری بیوشن لائنوں سمیت کم از کم تین میگاواٹ کے تین ہائیڈل پاور اسٹیشن تعمیر کرے گا۔ یہ تین اضلاع میں سے ہر ایک میں ایک ہائی اسکول اور ایک پیشہ ورانہ تربیتی مرکز بھی تعمیر کرے گا، اس کے علاوہ اپر کوہستان کے Seo میں ایک ہائی اسکول کی تعمیر نو کرے گا۔ اسی طرح مقامی گھریلو صارفین کی طرف سے دسمبر 2022 تک پیسکو کو بجلی کے بقایا جات کی ادائیگی، مقامی لوگوں کو کلاس 4 کی نوکریوں کی فراہمی، دیگر ملازمتوں میں مقامی لوگوں کو ترجیح، پتن سیری میں ڈوبر کھوار ٹرانسمیشن لائن کے متاثرین کو معاوضہ اور کیال کھوار اور داسو ہائیڈرو پاور پراجیکٹ کے متاثرین کے لیے پالاس سیری اور ہاؤس ہولڈ پیکج معاہدے کی نمایاں خصوصیات میں شامل ہیں۔ اس کے بدلے میں معززین ڈوبر داسو ٹرانسمیشن لائن پر تعمیراتی کام کی فوری بحالی کو یقینی بنائیں گے۔ اپر کوہستان، لوئر کوہستان اور کولائی پالاس کوہستان کے اضلاع کے معززین بھی ٹرانسمیشن لائن کی تکمیل تک اس پر عمل درآمد کو یقینی بنائیں گے۔

واپڈا صوبہ خیبر پختونخوا کے ضلع بالائی کوہستان میں دریائے سندھ پر 4320 میگاواٹ کا داسو ہائیڈرو پاور پراجیکٹ تعمیر کر رہا ہے۔ یہ منصوبہ دو مرحلوں میں مکمل کیا جا رہا ہے۔ اس وقت واپڈا 2160 میگاواٹ کی نصب شدہ پیداواری صلاحیت کے ساتھ اسٹیج-I تعمیر کر رہا ہے اور کم لاگت اور ماحول دوست بجلی کے 12 بلین یونٹ سالانہ توانائی کی پیداوار ہے۔ مرحلہ II، جب لاگو ہوتا ہے، نیشنل گرڈ کو 9 بلین یونٹ بھی فراہم کرے گا۔ دونوں مراحل کی تکمیل پر داسو پاکستان میں سب سے زیادہ سالانہ توانائی پیدا کرنے والا منصوبہ بن جائے گا یعنی اوسطاً 21 ارب یونٹ۔

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں