22

پرویز الٰہی نے عدالت سے رجوع کرنے کا اعلان کر دیا۔

وزیراعلیٰ پنجاب پرویز الٰہی۔  - ٹویٹر ویڈیو کا اسکرین گریب
وزیراعلیٰ پنجاب پرویز الٰہی۔ – ٹویٹر ویڈیو کا اسکرین گریب

لاہور: وزیراعلیٰ پنجاب چوہدری پرویز الٰہی نے گورنر کی جانب سے ڈی نوٹیفائی کرنے کے اقدام کو مسترد کرتے ہوئے فیصلے کے خلاف عدالت جانے کا فیصلہ کیا ہے۔

چوہدری پرویز الٰہی کی قانونی ٹیم عامر سعید ایڈووکیٹ کی سربراہی میں فیصلے کے خلاف عدالت سے رجوع کرے گی۔

“میں ڈی نوٹیفکیشن کو مسترد کرتا ہوں۔ میں پنجاب کا وزیر اعلیٰ ہوں اور کابینہ کام کرتی رہے گی،‘‘ چوہدری پرویز الٰہی نے اپنے ڈی نوٹیفکیشن پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے کہا۔

پنجاب کے وزیر پارلیمانی امور راجہ بشارت نے بھی پرویز الٰہی سے ملاقات کی جس میں عدالت جانے سے قبل قانونی آپشنز پر تبادلہ خیال کیا۔

ادھر پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) نے گورنر کے نوٹیفکیشن کو مسترد کر دیا ہے۔ سینئر نائب صدر فواد چوہدری نے کہا کہ وزیراعلیٰ الٰہی کے ڈی نوٹیفکیشن کے نوٹیفکیشن کی کوئی قانونی حیثیت نہیں ہے۔

ٹوئٹر پر فواد نے کہا کہ پرویز الٰہی اور صوبائی کابینہ اپنی ذمہ داریاں نبھاتے رہیں گے، اور گورنر کی برطرفی کے لیے صدر کو ریفرنس بھیجا جائے گا۔ اس رپورٹ کے آنے تک ذرائع کے مطابق گورنر پنجاب کو ان کی مبینہ بددیانتی پر ہٹانے کے لیے عدالت سے رجوع کرنے کے ساتھ ساتھ صدر کو باضابطہ خط لکھنے کا مسودہ تیار کیا جا رہا ہے۔ ذرائع کے مطابق پی ٹی آئی کی قانونی ٹیم آج عدالت سے رجوع کرے گی۔

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں